بین الاقوامی

امریکہ کی افغانستان میں پھر بمباری 200 طالبان ہلاک 100 گاڑیاں تباہ

کابل: امریکی طیاروں نے ایک بار پھر افغانستان میں طالبان کے ٹھکانوں بمباری کردی. افغان ملٹری کے ترجمان فواد امان کے مطابق امریکی B-52 بمبار طیاروں نے صوبے جوزجان کے شہر شبرغان میں بمباری کی جس کے نتیجے میں طالبان کو بھاری جانی و مالی نقصان کا سامنا کرنا پڑا، اطلاعات کے مطابق امریکی بمباری میں 200 کے قریب طالبان مارے گئے اور 100 سے زائد گاڑیاں تباہ ہوگئیں جب کہ بڑے پیمانے پر ہتھیار بھی تباہ کردیے گئے۔


امریکی میڈیا کے مطابق B-52 بمبار طیاروں کو AC-130 گن شپ جہاز کی بھی معاونت حاصل تھی، اس کے علاوہ افغان زمینی فورسز کی جانب سے بھی بھاری ہتھیاروں کا استعمال کیا گیا ۔ اس سے قبل روسی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق امریکی طیاروں نے ہلمند، ہرات اور قندھار میں طالبان کے ٹھکانوں کو نشانہ بنایا۔ رپورٹ کے مطابق امریکی صدر نے طالبان پر حملوں کے لیے بی 52 طیارے افغانستان بھیجنے کا حکم دیا تھا۔


واضح رہے کہ طالبان نے سیکیورٹی فورسز سے گھمسان کی جنگ کے بعد افغانستان کے صوبے نمروز کے زرنج اور جوزجان کے دارالحکومت شبرغان کا کنٹرول حاصل کرلیا، اطلاعات کے مطابق اب طالبان کی قندوز شہر کے دارالحکومت پر قبضہ کے لیے تیزی سے پیشقدمی جاری ہے اور طالبان نے پولیس ہیڈکوارٹر مقامی جیل پر قبضہ بھی کرلیا ہے۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

%d bloggers like this: